سعودی عرب، حج سیزن کے دوران پہلی بار سیلف ڈرائیونگ ائیر ٹیکسی سروس متعارف

ائیر ٹیکسی air taxi

سعودی عرب میں پہلی بار حج سیزن کے دوران سیلف ڈرائیونگ ائیر ٹیکسی سروس متعارف کرا دی گئی۔

سعودی عرب کی حکومت حج اور عمرہ سیزنز کے دوران عازمین کی سہولت اور راحت و آرام کے ساتھ مناسک کی ادائی کو یقینی بنانے کے لئے انقلابی اقدامات کر رہی ہے۔

سعودی عرب نے اس بار عازمین کی نقل وحرکت کے لئے سیلف ڈرائیونگ ائیر ٹیکسی سروس متعارف کرائی ہے، سعودی وزیر ٹرانسپورٹ انجینئر صالح بن ناصر الجاسر نے مکہ مکرمہ میں سیلف ڈرائیونگ ایئر ٹیکسی کے ٹرائل کا افتتاح کر دیا ہے۔

سعودی عرب نے امریکا سے 80 سالہ اہم معاہدہ ختم کردیا

پہلی بار متعارف کرائے گئے تجربے میں شامل اس ایئرٹیکسی سروس کی کئی خصوصیات ہیں، ان میں برقی نظام کے تحت چلنے والی ائیر ٹیکسی کو عمودی طور پر ٹیک آف کیا جا سکتا ہے۔ یہ طیارہ نما ٹیکسی دنیا کی پہلی ہوائی ٹیکسی ہے جسے سعودی عرب کے سول ایوی ایشن اتھارٹی میں شامل کیا گیا ہے۔

سیلف ڈرائیونگ ائیر ٹیکسی سروس عازمین حج کی مشاعر مقدسہ تک آمد ورفت کے لیے ایک انقلابی سروس ہے جو حجاج کی نقل وحرکت کے ساتھ طبی آلات کی نقل و حمل، سامان کی ترسیل اور لاجسٹک خدمات کی فراہمی میں مدد گار ہوسکتی ہے۔

الجاسر کا کہنا تھا کہ ہوائی ٹیکسی کے تجربے کا آغاز نقل و حمل اور لاجسٹکس کے نظام کے اقدام کا حصہ ہے، یہ اقدام مستقبل کی جدید ترین نقل و حمل کی ٹیکنالوجیز کو لاگو کرنے، نئے اور جدید ماحول دوست نقل و حمل کے ماڈلز کو اپنانے، مصنوعی ذہانت کی ایپلی کیشنز پر انحصار کرنے اور جدید نقل و حمل کے شعبے کی پائیداری کے لیے مملکت کے وژن 2030 کے اہداف کے حصول کی طرف پیش رفت کرنا ہے۔

مناسک حج کا آغاز، عازمین آج منیٰ روانہ ہوں گے

اس حوالے سے سعودی عرب کی جنرل اتھارٹی آف سول ایوی ایشن کے چیئرمین عبدالعزیز بن عبداللہ الدوعیلج نے وضاحت کی کہ سول ایوی ایشن کا شعبہ تمام خدمات کو ترقی دینے کا خواہاں ہے۔

اس طرح کی کوششوں اور منصوبوں کا مقصد حج کے موقع پر ضیوف الرحمان کی خدمت کے لیے تمام سہولیات فراہم کرنے کے لیے مختلف دیگر سرکاری اداروں کے ساتھ مل کر ان کی ٹرانسپورٹ سروس کو بہتر بنانا ہے۔


متعلقہ خبریں