مقبوضہ کشمیر: بھارتی فوج نے گھر دھماکے سے اڑا دیا

فائل فوٹو


سری نگر: بھارتی قابض فوج نے مقبوضہ کشمیر میں سرچ آپریشن کی آڑ میں ایک گھر کو دھماکے سے اڑا دیا ہے اور پر امن مظاہرین پر فائرنگ اور آنسو گیس کی شیلنگ بھی کی ہے۔

ابتدائی اطلاعات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی جانب سے دہشت گردی کی تازہ کارروائی میں پر امن مظاہرین پر پیلٹس اور آنسو گیس کی شیلنگ کی گئی ہے۔

سوموار کے روز کشمیری ضلع شوپیاں میں بھارتی قبضے کے خلاف پر امن مظاہرہ کر رہے تھے جن پر قابض فوج نے لاٹھی چارج کیا اور تشدد کا نشانہ بنایا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارتی فوج نے سرچ آپریشن کی آڑ میں ایک گھر کو بھی دھماکے سے اڑا دیا ہے۔ علاقے میں انٹرنیٹ سروس بھی معطل ہے۔

نومبر 2018 میں بھی بھارتی قابض فوج نے 48 بے گناہ کشمیریوں کو شہید کر دیا تھا جن میں تین خواتین اور دو بچے بھی شامل تھے جب کہ شہید ہونے والوں میں بڑی تعداد نوجوانوں کی تھی۔

گزشتہ ماہ بھارتی فوج کی فائرنگ، پیلٹس اور آنسو گیس کی شیلنگ سے 196 کشمیر شدید زخمی ہو گئے جب کہ حریت رہنماؤں سمیت 169 افراد کو بلا وجہ گرفتار کر کے حبس بے جا میں رکھا گیا۔ بھارتی فوج نے ماہ نومبر میں نام نہاد سرچ آپریشن کی آڑ میں مظلوم کشمیریوں کے 26 گھر بھی تباہ کیے تھے۔


متعلقہ خبریں