سندھ کا اعلیٰ تعلیم بجٹ وفاق سے بھی زیادہ رکھنے کی تجویز

تعلیم بجٹ

سندھ حکومت نے آئندہ مالی سال کے لیے اعلیٰ تعلیم کا بجٹ وفاق سے بھی زیادہ رکھنے کی تجویز دے دی، سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کا بجٹ 30 ارب روپے مختص کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کی طرف سے اپنی تجویز سمری کی صورت میں وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کو ارسال کردی ہے۔ سمری میں سندھ حکومت نے مالی سال 25-2024 کے لیے اعلیٰ تعلیم کے بجٹ کو 22 ارب روپے سے بڑھا کر30 ارب روپے کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس طرح سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کا بجٹ وفاقی ہائر ایجوکیشن کمیشن سے بھی زیادہ ہوجائے گا۔ آئندہ مالی سال کے لیے وفاقی ہائر ایجوکیشن کمیشن کا بجٹ 65 ارب روپے سے کم کرکے 25 ارب روپے کیا جارہا ہے۔

حکومت کا ملک بھر کے طلبہ کیلئے آن لائن تعلیمی پورٹل بنانے کا فیصلہ

دوسری طرف وفاقی ہائر ایجوکیشن کمیشن نے صوبائی جامعات کو بجٹ نہ دینے کے خلاف سندھ بھر کی سرکاری جامعات کا اجلاس ٹندو جام زرعی یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر فتح مری کی قیادت میں آج طلب کر رکھا ہے۔

اُدھر خیبرپختونخوا حکومت کی جانب سے گزشتہ ہفتے مالی سال 2024-25 کا بجٹ پیش کیا گیا۔ وزیر خزانہ کے مطابق تعلیم کے لیے کُل 362 ارب 68 کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں جو گزشتہ سال کے مقابلے میں 13 فیصد زیادہ ہیں۔ اعلیٰ تعلیم کے لیے 35 ارب 82 کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں۔


ٹیگز :
متعلقہ خبریں