ٹیلی کام کمپنیوں کی 5 لاکھ سے زائد نان فائلرز کی سمز بلاک کرنے پر رضامندی

mobile sims

ٹیلی کام کمپنیوں نے ملک میں 5 لاکھ 6 ہزار سے زیادہ نان فائلرز کی موبائل سِمز بلاک کرنے پر رضامندی ظاہر کردی۔

ٹیلی کام کمپنیوں کی جانب سے چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کو یقین دہانی کرا دی گئی ہے کہ ایک سے ڈیڑھ ہفتے میں 5 لاکھ 6 ہزار سے زائد نان فائلرز کی موبائل سمز بلاک کردی جائیں گی۔

5لاکھ سے زائد نان فائلرز کی سمز بلاک کرنے کا معاملہ، پی ٹی اے نے ایف بی آر کے خط کا جواب دے دیا

چیئرمین ایف بی آر ملک امجد زبیر ٹوانہ سے ٹیلی کام کمپنیوں کے عہدے داروں نے ملاقات کی ہے، جس میں انہوں نے 5 لاکھ 6 ہزار سے زیادہ نان فائلرز کی موبائل فون سمز بلاک کرنے کی حامی بھری اور کہا کہ آئندہ چند روز میں نان فائلرز کی سِمز بلاک کردی جائیں گی۔

ٹیلی کام کمپنیوں کے نمائندوں نے چیئرمین ایف بی آر کے ساتھ ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ کمپنیاں ملکی قوانین کی مکمل پاسداری کرتی ہیں۔

نان فائلرز کو انکم ٹیکس گوشوارے جمع کروانے کے پیغامات ارسال کیے جائیں گے، جس کے بعد ٹیکس گوشوارے جمع کروانے والے نان فائلرز کی ایف بی آر سے کلیئرنس کے بعد موبائل سمز بحال کردی جائیں گی۔

وزیر داخلہ کا زائد المیعاد شناختی کارڈز پر جاری موبائل سمز بند کرنے کا حکم

خیال رہے کہ چند روز قبل پاکستان ٹیلی کمیونیکشن اتھارٹی (پی ٹی اے)نے فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر )کے خط کا جواب دیتے ہوئے 5 لاکھ سے زائد سمز بلاک کرنے کی مخالفت کی تھی ۔

ترجمان پی ٹی اے کا کہنا تھا کہ نان فائلرز کی سمز بلاک کرنے کا عمل ہمارے نظام سے مطابقت نہیں رکھتا، ملک میں بڑی تعداد میں خواتین اور بچے مرد حضرات کے نام پر سمیں استعمال کرتے ہیں جبکہ پاکستان میں خواتین کے نام پر صرف 27 فیصد سمیں ہیں۔


متعلقہ خبریں