کیا سچے سوالوں پر کھڑے ہونے پر پھانسی دی جاتی ہے تو میں اچھی روایات چھوڑنے کو تیار ہوں،فیصل واوڈا

faisal wada

سینیٹر فیصل واوڈا نے کہا ہے کہ کیا سچے سوالوں پر کھڑے ہونے پر پھانسی دی جاتی ہے تو میں اچھی روایات چھوڑنے کو تیار ہوں۔

ہم نیوز کے پروگرام ”فیصلہ آپ کا عاصمہ شیرازی کیساتھ” میں گفتگو کرتے ہوئے فیصل واوڈا نے کہا کہ چیف جسٹس نے مجھے بلایا ہے تو میں ضرور جاؤں گا،جو میں نے باتیں کیں وہ چیف جسٹس کو بتاؤں گا، مجھے ابھی تک عدالت کی جانب سے کوئی نوٹس نہیں ملا، یہ میری خوش قسمتی ہے کہ مجھے ایماندار چیف جسٹس کے سامنے پیش ہونے کا موقع مل رہا ہے۔

فیصل واوڈا کی پریس کانفرنس پر سپریم کورٹ کا ازخود نوٹس

انہوں نے کہا کہ مجھے سنگل آؤٹ کیا گیا مگر مجھے اس پر کوئی اعتراض نہیں، میرے علاوہ گورنر سندھ، طلال چودھری اور مصطفی کمال نے بھی بات کی ہے۔میں نے کہا آپ ثبوت دے دیں، ہم آپ کے ساتھ کھڑے ہو جائیں گے، اگر ریکارڈ اورثبوت نہیں ہیں تو وہ محض صرف الزامات ہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سستی روٹی پر سٹے آرڈر، چھٹی والے دن حکومت گرا دی جاتی ہے، کیا یہ میرا گنا ہ ہے۔فیصل واوڈا نے کہا کہ اگر کسی نے کہا ہے میں پراکسی ہوں تو پھر انہیں ثابت کرنا ہو گا، میں نے کسی پر الزام نہیں لگایا۔ کیا سچے سوالوں پر کھڑے ہونے پر پھانسی دی جاتی ہے تو میں اچھی روایات چھوڑنے کو تیار ہوں۔

فیصل واوڈا نے کہا کہ اگر کسی نے کہا ہے میں پراکسی ہوں تو پھر انہیں ثابت کرنا ہو گا ، میں نے کسی پر الزام نہیں لگایا ۔ کیا سچے سوالوں پر کھڑے ہونے پر پھانسی دی جاتی ہے تو میں اچھی روایات چھوڑنے کو تیار ہوں ۔

طارق بشیر چیمہ نے زرتاج گل سے معافی مانگ لی

انہوں نے کہا کہ اگر مجھے عزت دی جائے گی تو میں ڈبل عزت دوں گا،لیکن اگر میرے ساتھ بدمعاشی کریں گے تو میں ڈبل کروں گا۔ میر ی پگڑی اچھالی گئی تو میں اس کی پگڑیوں کا فٹبال بنا دوں گا، میں نے کہا اگر سوشل میڈیا کمپین پر نوٹس لیں گے تو میں ساتھ ہوں۔

میری مرحوم والدہ کیخلاف کمپین چلائی گئی مگر کوئی نہیں بولا، مجھے دو مرتبہ اس پر سزا دی گئی جو میں نے گناہ ہی نہیں کیا تھا، میرا ایک بات کرنے کا لہجہ ہے مگر میں نے کسی کو گالی نہیں دی، اگر میں غلطی پر ہوا سب کے سامنے کسی سے بھی معافی مانگ لوں گا اور اگر میں غلط نہ ہوا تو گردن کٹا دوں گا لیکن معافی نہیں مانگو ں گا۔

لاہور: دھواں چھوڑنے والی گاڑیاں بند کرنے کا فیصلہ
فیصل واوڈا نے کہا کہ بھٹو صاحب کو پھانسی دی گئی، نسلہ ٹاور گرایا گیا، آصف زرداری کو 14سال سزا دی گئی، اس جج کا کیا ہوا۔


متعلقہ خبریں