چیف الیکشن کمشنر استعفی دیں، پی ٹی آئی نے عام انتخابات سے متعلق وائٹ پیپر جاری کردیا

پی ٹی آئی PTI

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے عام انتخابات سے متعلق وائٹ پیپر جاری کرتے ہوئے انتخابی اصلاحات اور چیف الیکشن کمنشر کے استعفے کا مطالبہ کردیا۔

چیئرمین پی ٹی آئی بیرسٹر گوہر علی نے سیکرٹری جنرل عمر ایوب اور شبلی فراز سمیت دیگر رہنمائوں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ 8 فروری 2024 کے الیکشن میں ہمارے امیدواروں کے کاغذات نامزدگی مسترد کیے گئے،انتخابات سے قبل ہمیں انتخابی مہم کیلئے لیول پلیئنگ فیلڈ نہیں دی گئی۔

ایس آئی ایف سی کے نتائج ، چھ ممالک کے ساتھ دس بلین ڈالرز کے معاہدے

انہوں نے کہا کہ ہمارا انتخابی نشان چھین لیا گیاتھا۔ ہم نے سپریم کورٹ میں پٹیشن دائر کی ہے اور پورے پاکستان میں ہماری اب تک 158 پٹیشن دائر ہو چکی ہیں ،آج ہم وائٹ پیپر جاری کرنے جا رہے ہیں 300 صفحات پر مشتمل یہ وائٹ پیپر ہے۔

ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ ہمارے مقدمات اور انتخابی عذرداریوں کو جلد سے جلد سنا جائے، ہماری الیکشن کمیشن سے درخواست ہے جلد سے جلد پٹیشنز کو نمٹایا جائے، ہم چاہتے ہیں الیکشن میں دھاندلی نہ ہو۔

اسلام آباد: 10 کلو آٹے کا تھیلا 1200روپے کا ہو گیا

اس موقع پر سیکرٹری جنرل عمر ایوب بے کہا کہ ضمنی انتخابات میں بھی کھلی دھاندلی ہوئی ہے ، وائٹ پیپر کے 300 پیج میں تمام شواہد موجود ہیں، چیف الیکشن کمشنر صاف شفاف الیکشن کروانے میں ناکام ہو گئے ہیں ، ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ چیف الیکشن کمشنر اپنے عہدے سے استعفی دیں ۔

رہنما پی ٹی آئی شبلی فراز نے کہا کہ ہم نے آزاد حیثیت سے مختلف انتخابی نشانوں کے ذریعے الیکشن لڑا، الیکشن کمیشن کی ذمہ داری بنتی تھی کہ صاف وشفاف انتخابات کرائے۔


متعلقہ خبریں