پاک نیوزی لینڈ سیریز چھوڑنے والے کیوی کرکٹرز کیلئے آئی پی ایل میں مواقع کی کمی


رواں ماہ پاک نیوزی لینڈ سیریز کو انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کی وجہ سے چھوڑنے والے کیوی کھلاڑیوں کو مواقع کی کمی سامنا۔

پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان ہونے والی سیریز کو چھوڑ کر آئی پی ایل کو فوقیت دینے والے کیویز کھلاڑی پلیئنگ الیون میں جگہ بنانے کیلئے کوشاں ہیں۔ نیوزی لینڈ کے کرکٹرز بھارت میں سیزن کے اچھے آغاز کے لیے میچز کے منتظر ہیں۔

آئی پی ایل: 523 رنز، 38 چھکے، ممبئی انڈینز اور سن رائزرز حیدرآباد کا عالمی ریکارڈ

نیوزی لینڈ میڈیا کے مطابق 9 کیوی کرکٹرز اس وقت آئی پی ایل معاہدے پر ہیں جبکہ اب تک 4 ہی کرکٹرز کو میچز کھیلنے کا موقع ملا ہے۔ کیوی کرکٹرز پانی پلانے کے لیے دوڑتے اور صرف پریکٹس کرتے دکھائی دیتے ہیں۔

آئی پی ایل کے قوانین کے مطابق ایک ٹیم میچ کے لیے صرف 4 غیر ملکی کھلاڑیوں کو پلیئنگ الیون میں شامل کر سکتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ نیوزی لینڈ کے کھلاڑیوں کو پلیئنگ الیون کا حصہ بننے کے لیے مشکلات کا سامنا ہے۔

نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے کپتان کین ولیمسن اب تک آئی پی ایل میں صرف 2 میچز ہی کھیل سکے جبکہ تین میں ریسٹ کرنا پڑا۔ میچل سینٹنر، ڈیون کانوے، لوکی فرگوسن، گلین فلپس اور میٹ ہنری کو اب تک کوئی میچ نہیں ملا۔

پاک نیوزی لینڈ سیریز، قومی اسکواڈ کا اعلان کل پریس کانفرنس میں متوقع

اسی طرح کیوی فاسٹ باؤلر ٹرینٹ بولٹ 4 میچز، رچن رویندرا 5 میچز اور نیوزی لینڈ کے سب سے مہنگے پلیئر ڈیرل میچل پانچ کے پانچ میچز کھیل چکے ہیں۔

خیال رہے کہ پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان 5 میچز پر مشتمل ٹی ٹوئںٹی سیریز کا آغاز 18 اپریل سے ہوگا۔ سیریز کے لیے نیوزی لینڈ نے اسکواڈ کا اعلان پہلے ہی کر رکھا ہے جس میں صرف چند ہی بڑے نام شامل ہیں جبکہ سینیئر کرکٹرز آئی پی ایل میں مصروف ہونے کے باعث ٹیم کا حصہ نہیں۔


متعلقہ خبریں