ضمانت بعد از گرفتاری کیس: “یہ عدالت ہے ہالی وڈ نہیں”، چیف جسٹس وکیل پر برہم

چیف جسٹس

چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے ایک سماعت کے دوران وکیل کے رویے پر اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ عدالت ہے ہالی وڈ نہیں، ڈرامہ نہ کریں۔

سپریم کورٹ میں آج چیف جسٹس کی سربراہی میں ضمانت بعد از گرفتاری کیس کی سماعت ہوئی۔ دوران سماعت چیف جسٹس قاضی فائز عیسٰی نے وکیل کے رویے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے انہیں ڈانٹ دیا۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ یہ عدالت ہے ہالی وڈ نہیں، یہ ڈرامہ یہاں نہ کریں۔ آپ نے جج کی بات کو درست ماننے سے انکار کیا، گر غلطی کی ہے تو معذرت بھی کریں۔

پریکٹس اینڈ پروسیجر ایکٹ کیس،چیف جسٹس نے بینچ میں شامل ججز کو سوال کرنے سے روک دیا

چیف جسٹس نے وکیل سے مخاطب ہوکر کہا کہ آپ کہہ رہے ہیں کہ 5 مقدمات ہیں لیکن یہ آٹھ ہیں۔ آپ کی ہر بات کو ہمیں چیک کرنا پڑے گا۔

بعد ازاں وکیل نے عدالت سے اپنے رویے پر معذرت کرلی۔


متعلقہ خبریں