برڈ فلو سے انسانوں کو خطرہ، عالمی ادارہ صحت نے وارننگ جاری کر دی

عالمی ادارہ صحت

فائل فوٹو


عالمی ادارہ صحت نے وارننگ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ برڈ فلو اب پرندوں سے ممالیہ جانوروں میں پھیلنے لگا ہے، جس سے اس کے انسانوں میں پھیلنے کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔

پروپاکستانی کے مطابق عالمی ادارہ صحت کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ پولینڈ میں کئی بلیوں میں برڈ فلو پایا گیا ہے۔

پولینڈ کے محکمہ صحت کی طرف سے عالمی ادارہ صحت کو الرٹ کیا گیا ہے۔

پولش حکام کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ پورے ملک میں غیرمعمولی طور پر برڈ فلو سے متاثرہ بلیوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ اب تک 46مشکوک بلیوں کے ٹیسٹ کیے گئے جن میں سے 26میں برڈ فلو پایا گیا۔

رپورٹ کے مطابق 2020ءکے بعد سے اب تک 12 انسانوں کے برڈ فلو سے متاثر ہونے کا ریکارڈ موجود ہے۔

عالمی ادارہ صحت کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ اب تک 3براعظموں سے ممالیہ جانوروں میں برڈ فلوپائے جانے کی رپورٹس موصول ہو چکی ہیں جن میں کتے اور بلیاں بھی شامل ہیں۔

ادارے کی طرف سے کہا گیا ہے کہ دنیا میں مزید خطے بھی ہوں گے جہاں ممالیہ جانوروں میں برڈ فلو موجود ہو تاہم تشخیص نہ ہوئی ہو۔


متعلقہ خبریں