صوبائی حکومت اور انتظامیہ کا صفائی کیلئے آپریشن جاری ہے، فیاض الحسن چوہان


لاہور: وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ پنجاب  میں عید پربزدارحکومت اور انتظامیہ صفائی کیلئے آپریشن جاری رکھےہوئے ہیں۔

ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ تمام اضلاع میں انتظامیہ کی جانب سے بروقت اقدامات کیے گئے ہیں۔ بنیادی توجہ آلائشیں ڈمپنگ سائٹس تک لے جا کر تلف کرنا ہے۔

وزیراطلاعات پنجاب نے کہا کہ پنجاب کے بڑے شہروں میں 28165 افراد پر مشتمل عملہ کام کر رہا ہے۔ تمام شہروں کی یونین کونسلزمیں صفائی کیلئےخصوصی کیمپ لگائے گئے ہیں۔

فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ آلائشوں کو تلف کرنے کیلئے خصوصی بیگز بھی تقسیم کیے گئے ہیں۔ لاہور میں ایل ڈبلیو ایم سی کی جانب سے 1.7 ملین بیگز تقسیم کیے گئے۔ بزدارحکومت ضروری اقدامات اور وسائل بروئے کار لا رہی ہے۔

دریں اثناء لاہور کےبیشتر علاقوں میں آلائشوں کا تعفن ختم کرنے کیلئے عرق گلاب کا اسپرے کیا گیا۔ لکشمی چوک، راج گڑھ، مزنگ، گلبرگ، فیروز پور روڈ، وحدت روڈ، سمن آباد، عثمانی روڈ، کالج روڈ، گرومانگٹ روڈ، جوہر ٹاوَن اور دیگرعلاقوں میں اسپرے کیا گیا۔

ایم ڈی ایل ڈبلیو ایم سی شاہزیب حسنین  کا کہنا ہے کہ شہریوں کو تعفن سے پاک ماحول دینا محکمے کی اولین ترجیح ہے۔ چھڑکاوَ کیلئے ایل ڈبلیو ایم سی کی 6 واٹر بوزرز مشینری مختص کی گئی ہے۔ شہری تعاون کریں اور جانوروں کی آلائشوں کو جگہ جگہ مت پھینکیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے لاہور کے نشیبی علاقوں میں بارش کا پانی کھڑا ہونے پر اظہار برہمی کرتے ہوئے واسا حکام کو فوری نکاسی آب کا حکم جاری کیا تھا۔

عثمان بزدار نے نشیبی علاقوں میں بارش کا پانی کھڑا ہونے رپورٹ طلب کر لی تھی اور استفسار کیا تھا کہ پیشگی اقدامات کیوں نہیں کیے گئے؟

یہ بھی پڑھیں: عثمان بزدار اور پرویز الٰہی کا مل کر پنجاب کے عوام کی خدمت کے عزم کا اعادہ

وزیر اعلیٰ پنجاب کا کہنا تھا کہ بارش کا پانی کھڑا ہونے سے شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے ،متعلقہ حکام کی بے خبری افسوسناک ہے۔

انہوں نے کہا تھا کہ پانی کھڑا ہونے سے صفائی کے کام میں رکاوٹ آ سکتی ہے، تاج پورہ اور دیگر علاقوں سے پانی نکالنے کے لئے فوری اقدامات کئے جائیں۔

یہ بھی پڑھیں: وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سے وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کی ملاقات

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا مزید کہنا تھا کہ پانی کے نکاسی کے کام میں سستی برداشت نہیں، ضروری مشینری کے ذریعے نکاسی آب کو کم سے کم وقت میں یقینی بنایا جائے۔

خیال رہے کہ لاہور میں چند گھنٹے کی بارش نے جل تھل ایک کردیا ہے اور بارش کے بعد لاہور کے اکثر نشیبی علاقے پانی میں ڈوب گئے ہیں۔

بارش کے بعد لاہور کے لکشمی چوک اوراندرون شہر کے مختلف علاقے زیر آب آ گئے ہیں جس کے باعث شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے۔ واٹر اینڈ سیورج اتھارٹی (واسا) کے اہلکار نکاسی آب میں مصروف ہیں۔


متعلقہ خبریں