وزیراعظم کی تاجک صدر کو کراچی بندرگاہ پر تجارت کی دعوت

کراچی بندرگاہ shahbaz sharif

وزیراعظم شہباز شریف نے تاجک صدر قاہر رسول زادہ کو کراچی بندرگاہ پر تجارت کی دعوت دیتے ہوئے کہا ہے کہ ریل اور روڈز سے علاقائی روابط کو مزید فروغ دیا جا سکتا ہے۔

پاکستان وسط ایشیائی ممالک کو تجارتی راہداری فراہم کرے گا،پاکستان علاقائی تجارت کے فروغ کے لیے عنقریب علاقائی کنیکٹیویٹی سمٹ کی میزبانی کرے گا، پاکستان اپنے ویژن سینٹرل ایشیا پالیسی پر عمل پیرا ہے۔ تاجکستان سمیت وسطی ایشیائی ممالک کے ساتھ روابط بڑھائے جائیں گے۔

عمران خان ، شاہ محمود ، اسد قیصر اور شیخ رشید تھانہ آبپارہ میں درج مقدمے سے بھی بری

وزیراعظم شہباز شریف نے تاجک صدر قاہر رسول زادہ سے ملاقات کی، باہمی دلچسپی کے تمام شعبوں میں دوطرفہ تعاون کے فروغ پر اطمینان کا اظہار اور کراچی بندرگاہ پر تجارت کی دعوت دی۔

وزیراعظم محمد شہبازشریف نے موجودہ برادرانہ تعلقات کو مزید مضبوط بنانے کی مشترکہ خواہش کا اعادہ کرتے ہوئے تاجک ہم منصب کوآبی کانفرنس کے کامیاب انعقاد پر مبارک دی۔

شہباز شریف نے دوران ملاقات آبی سفارت کاری کے شعبے میں تاجکستان کے قائدانہ کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک میں اسٹریٹجک شراکت داری کے معاہدے تعلقات میں ایک تاریخی سنگ میل ہیں، تعلقات کی بلندی سے اقتصادی شعبوں میں تعاون کو فروع ملے گا۔

پاکستان اورتاجکستان کے درمیان مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط،تعلقات مزیدمضبوط کرنے کے عزم کا اعادہ

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان اپنے ویژن سینٹرل ایشیا پالیسی پر عمل پیرا ہے، تاجکستان سمیت وسطی ایشیائی ممالک کے ساتھ روابط بڑھائے جائیں گے، دوران گفتگو وزیر اعظم نے پائیدار اور طویل مدتی سماجی و اقتصادی ترقی کے لیے علاقائی روابط کی کلیدی اہمیت پر زور دیا۔

وزیراعظم نے تاجکستان کے تاجروں کو کراچی بندرگاہ پر راہداری تجارت کرنے کی دعوت دیتے ہوئے کہا کہ ریل اور روڈز سے علاقائی روابط کو مزید فروغ دیا جا سکتا ہے، پاکستان وسط ایشیائی ممالک کو تجارتی راہداری فراہم کرے گا۔ ملاقات کے دوران شہبازشریف کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان علاقائی تجارت کے فروغ کے لیے عنقریب علاقائی کنیکٹیویٹی سمٹ کی میزبانی کرے گا۔


متعلقہ خبریں