برطانوی حکومت نے بادشاہ چارلس کی تصویر والے نئے بینک نوٹ جاری کر دیئے

چارلس

برطانیہ کی حکومت نے بادشاہ چارلس کی تصویر والے نئے بینک نوٹ جاری کرنا شروع کر دیئے ہیں۔

برطانوی قومی نشریاتی ادارے کے مطابق نئے نوٹوں کا اجراء خراب شدہ نوٹوں کی جگہ کیا جا رہا ہے ، جب مانگ پیدا ہو گی تو آہستہ آہستہ بڑی تعداد میں جاری کیے جائیں گے۔

برطانوی وزیر اعظم رشی سونک کنگ چارلس سے بھی زیادہ امیر نکلے

شاہ چارلس برطانوی تاریخ کے دوسرے بادشاہ ہیں جو ان نوٹوں پر نظر آئیں گے، ملکہ الزبتھ نے 1960 میں اس روایت کا آغاز کیا۔رپورٹس کے مطابق خریدار اب بھی ایسے موجودہ 5، 10، 20، اور 50 پائونڈ کے نوٹ استعمال کر سکتے ہیں جن میں مرحوم ملکہ کی تصویر کنندہ ہے۔

ادارے کے مطابق گزشتہ سال جو پہلے نئے نوٹ چھاپے گئے تھے ان پر شاہ چارلس کی تصویر 2013 میں لی گئی تصویر ڈالی گئی تھی۔ بینک آف انگلینڈ کے گورنر اینڈریو بیلی نے نئے نوٹوں کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک تاریخی لمحہ ہے۔

شاہ چارلس کا 360 سال پرانا تاج، کتنا سونا اور جواہرات لگے ہیں؟

موجودہ پولیمر بینک آف انگلینڈ کے بینک نوٹوں کی پشت پر اب بھی وہی تصویر ہے جس میں سرونسٹن چرچل، جین آسٹن، جے ایم ڈبلیو ٹرنر، اور ایلن ٹورنگ صعودی ترتیب میں ہیں۔ سکاٹ لینڈ اور شمالی آئرلینڈ میں جاری کردہ نوٹوں میں بادشاہ کی نہیں بلکہ دوسری تصاویر ہیں۔


متعلقہ خبریں