ایف بی آر کسٹمز میں 5 ارب روپے کی مالی بے ضابطگیاں

fbr

 ایف بی آر کسٹمز میں 5 ارب روپے کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔

ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ درآمدی اشیاء پر مکمل ٹیکس وصول نہ کرنے سے 3 ارب 52  کروڑ کا نقصان ہوا ، ویئر ہاؤسز میں ایک ارب 45 کروڑ کی بے قاعدگیوں، خوردبرد اور چوری کا انکشاف ہوا ہے۔

رپورٹ کے مطابق اسمگل شدہ گاڑیاں، اسمارٹ فون اور غذائی اشیاء ویئر ہاؤسز میں پڑی خراب ہو گئیں۔  300 ضبط شدہ گاڑیاں نیلام نہ کرنے  سے 80 کروڑ 71 لاکھ روپے کا نقصان ہوا ہے ، اس کے علاوہ 18 کروڑ 86 لاکھ  کے 46 ہزار 982 اسمارٹ فونزکی بھی نیلامی نہیں کی گئی۔

ایف بی آر کا تاجروں کیلئے آسان ٹیکس ریٹرن فارم لانے کا اعلان

رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہےکہ کھانے پینے کی اشیاء سمیت 42 کروڑ سے زائد کا دیگر سامان بھی گل سڑ کر خراب ہو گیا، عملے نے 2 کروڑ 41 لاکھ روپے کی 3 گاڑیاں کم قیمت ایک کروڑ 39 لاکھ میں فروخت کردیں۔  کراچی اورکوئٹہ ویئر ہاؤسز سےبھی  91 لاکھ 80 ہزار روپے کا سامان چوری ہوا ہے۔


ٹیگز :
متعلقہ خبریں