پاک نیوزی لینڈ سیریز منسوخ ہونے پر قومی کرکٹرز افسردہ


 پاک نیوزی لینڈ سیریز منسوخ ہونے پر قومی کرکٹرز افسردہ ہو گئے۔

سیریز منسوخ ہونے پر  کپتان بابر اعظم، محمد حفیظ، انور علی، عامر یامین اور دیگر کرکٹرز کا دکھ بھرے  ٹوئٹ کرتے ہوئے مایوسی کا اظہار کیا ہے۔

کپتان بابر اعظم کا کہنا ہے کہ پاک نیوزی لینڈ سیریز ختم ہونے پر مایوسی ہوئی۔ سیریز سے لاکھوں شائقین کرکٹ کے چہروں پر مسکراہٹ آنی تھی۔سیکیورٹی ادارے ہمارا فخر ہیں ،پاکستان زند ہ باد۔

Extremely disappointed on the abrupt postponement of the series, which could have brought the smiles back for millions of Pakistan Cricket Fans. I’ve full trust in the capabilities and credibility of our security agencies. They are our pride and always will be! Pakistan Zindabad!


محمد حفیظ نے سوشل میڈیا کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک پیغام میں کہا ہے کہ  پاکستان محفوظ ملک اور قابل فخر قوم ہے۔ سیریز منسوخ کرنے کا فیصلہ پوری قوم کے لئے افسوسناک ہے۔

Pakistan ?? is Safe & Proud nation. Postponing series is absolutely Sad news for whole Nation.

عامر یامین نے اپنے ٹوئٹ میں مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان محفوظ ملک ہے۔ سیریز کا منسوخ ہونا مایوس کن خبر ہے۔

یہ بھی پڑھیں: نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کا دورہ پاکستان ختم کرنے کا اعلان

انور علی  خان نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ پاک نیوزی لینڈ سیریز ملتوی ہونے پر دل افسردہ ہے۔یہ اچھا نہیں ہوا، آپ کو بہترین سیکیورٹی فراہم کی گئی۔
سیریز ملتوی کرنے کا یکطرفہ فیصلہ درست نہیں.

سابق  کرکٹرز  نے بھی اپنے غصے اور غم کا اظہار کیا  ہے  شعیب اختر نے کہا ہے کہ نیوزی لینڈ نے پاکستان کی کرکٹ کو مار ڈالا ہے۔


شاہد آفریدی نے ٹویٹ میں کہا ہے کہ تمام  یقین دہانیوں کے باوجو سیکیورٹی  رسک پر ٹور کو منسوخ  کر دیا گیا انہوں نے نیوزی لینڈ ٹیم کو ٹیگ کرتے ہوئے کہا ہے کہ کیا آپ سمجھ سکتے ہیں کی اس فیصلے کے کیا اثرات ہوں گے؟


واضح رہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم نے دورہ پاکستان ختم کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ جس کے باعث پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان کرکٹ سیریز منسوخ کر دی گئی ہے۔

سی ای او نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم نے کہا ہےکہ ان کے  لیے دورہ پاکستا ن جاری رکھنا ممکن نہیں ۔پاکستان کرکٹ بورڈ نے کہا ہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ نے یکطرفہ طور پر سیریز ملتوی کرنے کا فیصلہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں: سیریز منسوخ: وزیراعظم کا نیوزی لینڈ کی ہم منصب سے رابطہ

مہمان ٹیم کی سیکیورٹی کے لیے فول پروف انتظامات کررکھے تھے، نیوزی کرکٹ بورڈ کو سیکیورٹی انتظامات کی یقین دہانی کرائی تھی۔

پاکستان اور نیوزی لینڈ کی ٹیمیوں کے مابین 18 سال بعد پاکستان میں میچ ہونے جا  رہا تھا۔ آخری لمحے پر دورہ منسوخ کر دیا گیا۔


متعلقہ خبریں