وفاقی کابینہ نے این95 اور سرجیکل ماسک کی برآمد کی اجازت دے دی


اسلام آباد: وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ وفاقی کابینہ نے این95 اور سرجیکل ماسک کی برآمد کی اجازت دے دی ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں فواد چودہدری نے کہا  پرسنل پروٹیکشن ایکوپمنٹ (پی پی ای) کی فہرست میں یہ آخری آئٹم تھے جن کی ایکسپورٹ پر پابندی تھی۔

انہوں نے کہا کہ 26 فروری کو پاکستان میں پہلا کورونا کیس آیا تو ہم تمام پی پی ای آئٹم امپورٹ کررہے تھے۔ آج پاکستان کورونا وائرس کے مواد کا بڑا ایکسپورٹر ہے۔

خیال رہے کہ 12 جون کو وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں قائم نسٹ یونیورسٹی نے کورونا وائرس کی تشخیص کی ڈائیگناسٹک کٹ تیار کر لی تھی۔

مزید پڑھیں:صوبے ماسک کے بغیر سیاحوں کو داخلے کی اجازت نہ دیں، این سی او سی

ڈریپ نے ڈائیگناسٹک کٹس کا لیب ٹرائل بھی مکمل کر لیا تھا۔ ڈریپ کی منظوری کے بعد فارما سیوٹیکل کمپنیز کی جانب سے کٹس کی بڑی تعداد میں پروڈکشن کا آغاز ہوگیا تھا۔

اس حوالے سے فواد چوہدری نے کہا تھا کہ ان کٹس کی مقامی سطح پر تیاری سے کورونا ٹیسٹ پر اخراجات میں نمایاں کمی آئے گی۔ مقامی کٹس سے ملکی درآمد بل کو بھی بڑی حد تک بچایا جا سکے گا۔

ترجمان وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی  نے کہا تھا کہ کورونا کی تشخیص کی کٹس باہر سے منگوائی جانے والی کٹس کی نسبت پاکستان میں کم پیسوں میں بہت جلد دستیاب ہوںگی۔


متعلقہ خبریں