امریکہ دباؤ میں نہ آنے والوں سے بات کرتا ہے، علی محمد

امریکی صدر کی ہربات کے پیچھے ان کا ضرور کوئی مقصد ہوتا ہے،رہنما پی ٹی آئی

  • یوٹرن کے حوالے سے عمران خان کے بیان سے دکھ ہوا، خرم دستگیر
  • امریکہ کا پاکستان کی قربانیوں کو نظر انداز کرنا اس کی غلطی ہے، نبیل گبول

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علی محمد خان نے کہا کہ امریکہ ہمیشہ ان سے بات کرتا ہے جو اس کے دباؤ میں نہ آئے ورنہ وہ سامنے والے کو دبانے کی کوشش کرتا ہے۔

ہم نیوز کے پروگرام “ندیم ملک لائیو”میں بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ہربات کے پیچھے ان کا ضرورکوئی مقصد ہوتا ہے۔

رہنما تحریک انصاف نے کہا کہ سیاست میں کوئی بھی چیز ہمیشہ کے لیے نہیں ہوتی کیونکہ ہر معاملے میں بات چیت کی گنجائش ہوتی ہے۔

احتساب کے حوالے سے علی محمد خان کا کہنا تھا کہ احتساب سب کا ہونا چاہیے، چاہے کوئی سیاست دان ہو یا کوئی اور، اسی لیے ہمارا احتساب بھی ہو رہا ہے، ہم کسی کو روکیں گے نہیں، شہباز شریف کو ہم نے جیل میں نہیں ڈالا، نئے پاکستان میں صرف چوروں اور ڈاکوؤں کا احتساب ہو گا۔

یوٹرن کے حوالے سے عمران خان کے بیان سے دکھ ہوا، خرم دستگیر

پروگرام میں موجود پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما خرم دستگیر نے کہا کہ امریکی صدر نے اس طرح کے ٹوئیٹس پہلی دفعہ نہیں کیے، مسلم لیگ (ن) کی حکومت میں بھی انہوں نے ایسا ہی کیا تھا جس کا میں نے خود انہیں جواب دیا تھا۔

وزیر اعظم عمران خان کے “یو ٹرن” کے حوالے سے دیئے گئے حالیہ بیان کے پر ان کا کہنا تھا کہ مجھے عمران خان کی اس بات کا دکھ ہے کیونکہ اس کے اثرات قومی سطح کے ساتھ  ساتھ بین الاقوامی سطح پر بھی پڑیں گے۔

احتساب کے حوالے سے رہنما (ن) لیگ نے کہا کہ احتساب کے نام پر تقریبا دو سال سے شریف خاندان کی ٹارگٹ کلنگ جاری ہے، یہ کون سا احتساب ہے؟ ایسا کہیں نہیں ہوتا کہ  پہلے حراست میں لیا جائے اور پھر ثبوت ڈھونڈے جائیں۔

امریکہ کا پاکستان کی قربانیوں کو نظر انداز کرنا اس کی غلطی ہے، نبیل گبول

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما نبیل گبول نے کہا کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف ایک طویل جنگ لڑتے ہوئے بہت قربانیاں دیں، امریکہ کا ان قربانیوں کو نظر انداز کرنا اس کی غلطی ہے۔

امریکی صدر کے حالیہ ٹویٹ کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ سربراہ پاک فوج نے ڈونلڈ ٹرمپ کو بہت اچھا جواب دیا ہے۔ سب کو یہ بات ذہن میں رکھنی چاہیے کہ امریکہ اور پاکستان دونوں ایٹمی طاقتیں ہیں، کسی کو کسی کا ڈر نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پارلیمانی کمیشن ضرور بنانا چاہیے، جمعہ کو ہونے والے اجلاس میں اس معاملے پر بات کرنے کی ضرورت ہے۔


متعلقہ خبریں