گیس بھرنے سے جاں بحق میاں، بیوی اور بچوں کی نماز جنازہ ادا


لاہور:  لاہور میں گھر کے کمرے میں گیس بھرنے سے جان بحق ہونے والے میاں بیوی اور دو معصوم بچوں کی نماز جنازہ ادا کر دی گئی ۔

لاہور کے علاقے جوہرٹاون میں کمرے میں گیس بھرنے کے باعث  میاں، بیوی اور دو بچے زندگی کی بازی ہار گئے تھے۔ گھر سے اچانک چار لاشیں برآمد ہوئیں تو علاقے میں کہرام مچ گیا اور ہر آنکھ اشکبار ہو گئی۔

جان بحق ہونے والے چاروں افراد کی نماز جنازہ ہفتہ کی صبح ادا کردی گئی، جس میں اہل علاقہ کی  بڑی تعداد شریک ہوئی۔ 

پولیس کے مطابق میاں بیوی کی شناخت رضوان بٹ اور سمیرا بٹ کے ناموں سے ہوئی ہے جب کہ بچوں کی شناخت آٹھ سالہ ارسل اور چھ سالہ ابوبکر کے ناموں سے ہوئی ہے۔

ابتدائی تحقیقات کے مطابق گھر کی بالائی منزل پر رہائش پذیر کرائے داروں نے گیس کی بو محسوس ہونے پر نیچے آکر دیکھا تو کمرے میں چاروں کی لاشیں پڑی تھیں۔

پولیس کے مطابق چاروں لاشوں پر بظاہر تشدد یا کسی آلے کے نشانات موجود نہیں ہیں، کمرے میں گیس والی استری سے گیس لیک ہو رہی تھی اور ایئرکنڈیشن بھی چل رہا تھا۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے جوہر ٹاؤن میں گھر سے چار افراد کی لاشیں ملنے کے واقعے کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے واقعے میں ملوث ملزمان کو جلد سے جلد گرفتار کرنے کا حکم دیا تھا۔


متعلقہ خبریں