وفاقی بجٹ کے 20 فیصد منصوبے فراڈ، پورا مافیا کام کرتا ہے، جام کمال خان

جام کمال

وفاقی وزیر برائے صنعت و تجارت جام کمال نے کہا ہے کہ وفاقی ترقیاتی بجٹ کے 20 فیصد تک منصوبے فراڈ ہوتے ہیں۔

انہوں نے اپنے ایک بیان میں شہباز کابینہ کے مالی سال 2024-25 کے بجٹ کے حوالے سے اہم انکشاف کیا۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ بجٹ میں کئی ایسے منصوبے ہیں، جو سیاست دانوں کے نہیں ہیں بلکہ فراڈ منصوبے گمنام ہوتے ہیں جن کا کوئی اونر نہیں ہوتا۔

سابق وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال نے ن لیگ میں شمولیت اختیار کرلی

جام کمال کا کہنا تھا کہ گمنام اور فراڈ منصوبے دور دراز علاقوں کے ڈلوائے جاتے ہیں تاکہ رسائی نہ ہو۔ اِن گمنام اسکیموں کے پیچھے پورا مافیا ہوتا ہے جو منصوبے منظور کرواتا ہے اور ٹینڈرز کے پیچھے پورا مافیا کام کرتا ہے۔

وزیر تجارت نے کہا کہ زیادہ تر ایسے منصوبے اریگیشن کے ہوتے ہیں۔ سینیٹرز کے علاوہ ایسے لوگ بھی منصوبے ڈلوا لیتے ہیں جو انتخابات ہار چکے ہیں۔


متعلقہ خبریں