اداروں نہیں ، افراد کیخلاف ہیں ، عمران خان صرف مقتدر حلقوں سے بات کرنا چاہتے ہیں ، عارف علوی

عارف علوی

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اور سابق صدر ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ ہم اداروں کے نہیں ، افراد کے خلاف ہیں۔ میڈیا، عدلیہ اور ریاست بند گلی میں ہو تو کوئی بھی نقصان کر سکتا ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عارف علوی نے کہا کہ عمران خان صرف ان حلقوں سے بات کرنا چاہتے ہیں جن کے پاس فیصلہ کرنے کا اختیار ہے ، فارم 47 والی حکومت کچھ نہیں کر سکتی۔

پریشر کُکر کچھ دن میں پھٹ کر اقتدار پر غاصبانہ قبضہ کرنیوالوں کو جھلسا دیگا ، عارف علوی

انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کا نشان بھی چھین لیا گیا الیکشن بھی لڑنے نہیں دیا لیکن سارے پاکستان کو معلوم ہے کہ وہ کس کے ساتھ ہیں۔ کل افسوس ہوا کہ ہمارا کیمپ اکھاڑ دیا گیا ۔ان بارہویں کھلاڑیوں کا شکریہ ادا کرتا ہوں جو ہمیں مقبول کر رہے ہیں ۔

عارف علوی کا کہنا تھا کہ بانی پی ٹی آئی نے کہا کہ 1971 میں یحییٰ خان کی وجہ سے نقصان ہوا، ہم نے حمود الرحمن کمیشن سے کچھ سیکھا نہ کارگل سے۔

‘قیدی نمبر 804 آپکے سامنے بیٹھا ہے’ عمران خان کا عارف علوی سے مکالمہ

انہوں نے مزید کہا کہ جب پریشر پڑے گا تو پریشر کوکر پھٹے گا۔ دو سال سے کہہ رہے ہیں مذاکرات ہونے چاہیئں لیکن مذاق ڑایا جاتا ہے۔ یہ معیشت ٹھیک نہیں ہوگی جب تک ساتھ کھڑے نہیں ہوں گے۔

سابق صدر نے کہا کہ میں ابھی بتا سکتا ہوں کس کس کو کیا کیا کہا گیا ہے، ملک صحیح راہ پر گامزن ہو سکتا ہے اگر انا ختم ہو جائے۔


ٹیگز :
متعلقہ خبریں