پنجاب حکومت کا تعلیمی نظام میں بہتری کیلئے پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ

پنجاب حکومت education

پنجاب حکومت نے نظام تعلیم کی بہتری کے لئے صوبے کے ہزاروں سرکاری اسکولوں کو آؤٹ سورس کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

محکمہ تعلیم پنجاب نے پبلک سکولز ری آرگنائزیشن پروگرام شروع کیا ہے جس کے تحت پنجاب کے 13,219 اسکولوں کو آؤٹ سورس کا جائے گا، پہلے مرحلے میں ابتر تعلیمی صورتحال والے 5863 اسکولوں کو آؤٹ سورس کیا جائے گا۔

محکمہ تعلیم کی رپورٹ کے مطابق منصوبے کامقصد اسکول سے باہر بچوں کو واپس اسکول لانا اور معیار نجی اسکولوں جیسا کرنا ہے،5863 میں سے 567 اسکولز میں کوئی استاد نہیں،2555 اسکولز میں صرف ایک استاد ہے،2741 اسکولز میں 50 طلبا ء پر صرف دواستاد ہیں، دوسرے فیزمیں 4453 اور تیسرے فیز میں 2903 اسکولوں کو آؤٹ سورس کیا جائے گا۔

پنجاب کے تعلیمی اداروں میں یکم جون سے موسم گرما کی تعطیلات کا اعلان

پنجاب حکومت کے اس فیصلے کے بعد سرکاری اسکولوں کو پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن کے تحت نجی افراد کو دیا جائے گا، آؤٹ سورس کئے جانے والے تعلیمی اداروں کو سرکاری سبسڈی دی جائے گی۔

محکمہ اسکول ایجوکیشن پنجاب کے مطابق پڑھے لکھے نوجوان لڑکے لڑکیاں، نجی تعلیمی ادارے،تعلیم سے دلچسپی رکھنے والے حضرات،غیر سرکاری تنظیمیں،بیرون ملک مقیم پاکستانی،Ed-Techادارے،اپنی کارپوریٹ سماجی ذمہ داری تعلیم کے میدان میں سر انجام دینے کے خواہشمند افراد یا اداروں کیلئے درخواست جمع کرانے کی آخری تاریخ 5جون مقرر کی گئی ہے۔


متعلقہ خبریں