آئین سے بالاتر نہ پارلیمنٹ ہے نہ سپریم کورٹ، فواد چودھری

فواد چوہدری (fawad chaudhry)

تحریک انصاف کے رہنما فواد چودھری نے کہا ہے کہ مذاکرات آئین کی حدود میں رہ کر ہوں گے۔

اگر سیاسی جماعتوں نے مل کر فیصلے کرنے شروع کئے تو آئین ایک طرف رہ جائے گا،سپریم کورٹ کے حکم پر مذاکرات کی بات ہوئی ہے ہم ویلکم کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ خیبر پختونخوا اور پنجاب کا مطلب ملک کا 75فیصد ہے،انہوں نے کہاکہ اگر مذاکرات کامیاب نہیں ہوتے تو سپریم کورٹ فیصلہ کرے گی۔

سپریم کورٹ کا فیصلہ نا مانا گیا تو عوام کو سڑکوں پر نکالوں گا، عمران خان

ہم چاہتے ہیں مذاکرات آج شروع ہوں اور کل تک نتیجہ نکلے،ان کا کہنا تھا کہ آئین سے بالاتر نہ پارلیمنٹ ہے نہ سپریم کورٹ ہے،نوے دن کے اندر الیکشن آئین کے تحت ہونے ہیں۔

اس طرح نہیں ہوتا کہ ہم نے پیسے نہیں دینے یا پارلیمنٹ نے نہیں دینے،سپریم کورٹ کے حکم پر آج مذاکرات شروع ہوتے ہیں تو ہم ویلکم کرتے ہیں،شاہ محمود کی قیادت میں ہمارے لوگ مذاکرات کیلئے جائیں گے۔


متعلقہ خبریں