ایف بی آر سے تمام امور طے، پی آئی اے کے اکاؤنٹس جلد بحال ہونیکا امکان

پی آئی اے pia

کراچی: پاکستان کی قومی ایئرلائن پی آئی اے اور فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے درمیان تمام امور طے پا گئے ہیں۔

پی آئی اے کو ری اسٹرکچر نہ کیا تو ایک،ڈیڑھ سال میں بند ہو سکتی ہے، خواجہ سعد رفیق

مؤقر نجی ٹی وی کے مطابق گزشتہ روز ایف بی آر نے ٹیکسز کی مد میں اربوں روپے سے زائد کے واجبات کی عدم ادائیگی پر پی آئی اے کے اکاؤنٹس منجمد کر دیے تھے۔

یاد رہے کہ پی ایس او نے بھی پی آئی اے کو فیول کی فراہمی بند کر دی تھی جس کے باعث کئی پروازیں منسوخ کرنا پڑی تھیں۔

پی آئی اے، کروڑوں کی ادائیگی کیلئے ریاض ایئرپورٹ اتھارٹی سے ریمانڈر موصول

گزشتہ سال بھی پی آئی اے پر کئی ماہ کے ٹیکسز پر مبنی دو ارب سے زائد کے واجبات کی عدم ادائیگی پر پی آئی اے کے 53 اکاؤنٹس منجمد کر دیے گئے تھے۔

پی آئی اے انتظامیہ کی جانب سے جب واجبات کی جلد ادائیگی کی یقین دہانی کرائی گئی تھی تو اس کے بعد منجمد اکاؤنٹس بحال کیے گئے تھے۔

سپریم کورٹ، پی آئی اے کو نئی بھرتیوں کی اجازت مل گئی

میڈیا رپورٹ کے مطابق ترجمان پی آئی اے کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ایف بی آر سے تمام امور طے پا گئے ہیں، ضروری کاغذی کارروائی کے بعد بینک اکاؤنٹس جلد بحال ہو جائیں گے۔


متعلقہ خبریں