آئی ایم ایف پروگرام کی وجہ سے پاکستان کا ترقیاتی بجٹ شدید متاثر

IMF آئی ایم ایف

آئی ایم ایف پروگرام کی وجہ سے پاکستان کا ترقیاتی بجٹ شدید متاثرہوا ہے۔

آئی ایم ایف اہداف پورے کرنے کیلئے ترقیاتی بجٹ پر ہر سال کٹوتی کا انکشاف سامنے آیا ہے،رواں سال 950 ارب کے ترقیاتی بجٹ میں سے صرف 379 ارب استعمال ہوئے۔

غیرقانونی ہاؤسنگ سوسائٹیز کیخلاف کریک ڈاؤن کا حکم

صحت، اعلیٰ تعلیم سمیت سماجی شعبے، انفراسٹرکچر کے کئی منصوبے متاثر ہوئے،پی ایس ڈی پی کے پہلے سے جاری منصوبوں کیلئے 9 ہزار 800 ارب درکار ہیں۔

دستاویز کے مطابق اگلے مالی سال کیلئے 1221 ارب روپے کا وفاقی پی ایس ڈی پی تجویزکیا گیا ہے،گزشتہ دس سال میں وفاقی ترقیاتی بجٹ سالانہ اوسطا 630 ارب روپے ریکارڈ کیا گیا۔

ایل پی جی 3 روپے 86 پیسے فی کلو سستی کردی گئی

روپے کی قدر میں نمایاں کمی اور مہنگائی کی وجہ سے بھی ترقیاتی بجٹ متاثر ہوا،وفاق نے صوبائی نوعیت کے منصوبوں کو بجٹ پربھاری بوجھ قرار دیدیا۔

ترقیاتی بجٹ بلحاظ جی ڈی پی 1.7 فیصد سے کم ہو کر 0.9 فیصد پر آگیا،دستاویزکے مطابق پرائمری خسارہ پورا کرنے کیلئے وفاقی ترقیاتی بجٹ پر کٹ لگایا جاتا ہے۔


ٹیگز :
متعلقہ خبریں