حملے کی صورت میں تائیوان پر بیجنگ کو برتری حاصل ہو گی، امریکی اعتراف

حملے کی صورت میں تائیوان پر بیجنگ کو برتری حاصل ہو گی، امریکی اعتراف

واشنگٹن: امریکہ نے اعتراف کیا ہے کہ تائیوان پر حملے کی صورت میں بیجنگ کو فضائی برتری حاصل ہو گی۔

چین کا 35 طیاروں اور 8 بحری جہازوں سے تائیوان کا گھیراؤ

مؤقر امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ اور دی گارڈین کے مطابق اس بات کا اعتراف خود امریکہ کی خفیہ دستاویزات میں کیا گیا ہے جن کی تفصیلات لیک ہونے کی صورت میں سامنے آئی ہیں۔

دستاویزات کے مطابق تائیوان کی عسکری قیادت کو فضائی دفاعی نظام کی صلاحیت پر شکوک و شبہات ہیں، نصف کی تعداد میں جنگی جہاز دشمن کے ساتھ مؤثر انداز میں لڑنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

اگر چین نے حملہ کیا تو امریکہ تائیوان کا دفاع کرے گا، بائیڈن

خفیہ دستاویزات کے مطابق تائیوان کو خوف ہے کہ طیاروں کو محفوظ مقامات پر پہنچانے میں ہی ایک ہفتہ لگ سکتا ہے جب کہ اس دوران وہ چینی میزائل حملوں کا نشانہ بھی سکتے ہیں۔

واضح رہے کہ چین کی پیپلز لبریشن آرمی تائیوانی فوج سے 14 گنا بڑی ہے، گزشتہ ہفتے تائیوان نے بڑے پیمانے پرہنگامی ردعمل کی مشقیں کی تھیں۔ اس کے بعد سے چین کے جنگی طیارے اور جنگی جہاز تائیوان کے اطراف میں متعین ہیں۔

امریکہ میں نوکری کے انوکھے اشتہار نے ہنگامہ برپا کر دیا

یاد رہے کہ امریکی محکمہ دفاع پینٹاگون میزائل مشقوں کی تفصیلات دینے پر بھی تائیوان کو سخت تنقید کا نشانہ بنا چکا ہے۔


متعلقہ خبریں