انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ،کئی امیدواروں پر بھاری جرمانے عائد

election comission

الیکشن کمیشن نے انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر مختلف امیدواروں پر جرمانے عائد  کردئیے ہیں ۔

پاکستان کیساتھ کشیدگی سے ثابت ہوتا ہے ایران کےخطے میں تعلقات اچھے نہیں،امریکی صدر

پی بی7 میں ن لیگ کے نور محمددمڑ پر انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر40ہزار جرمانہ عائد کیا گیا،پی کے 58مردان میں ذوالفقار خان پر 25 ہزار کا جرمانہ عائد کیا گیا۔

ترجمان الیکشن کمیشن کے مطابق  مردان میں پی کے 54 سے اے این پی امیدوار گوہر علی شاہ پر 10 ہزار روپے ،پی کے 61 میں ن لیگ کے امیدوار جمشید خان پر 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔

زرمبادلہ کےسرکاری ذخائرمیں بڑی کمی

سوات میں ایک امیدوار کو 20 ہزار روپے کا جرمانہ عائد کیا گیا،ضلعی مانیٹرنگ افسران نے انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر امیدواروں پر جرمانے عائد کیے۔

علاوہ ازیں عام انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کی تفصیلات جاری کردی گئی ہیں ۔

الیکشن کمیشن کے مطابق 17ہزار 816 امیدوار انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں ،قومی اسمبلی کی نشستوں پر 5 ہزار 121 امیدوار حصہ لے رہے ہیں،صوبائی اسمبلیوں کی نشستوں پر 12 ہزار 695 امیدوار میدان میں ہیں ۔

پاکستان اور ایران دونوں تحمل سے کام لیں، روس

قومی اور صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر 11 ہزار 785 آزاد امیدوار حصہ لے رہے ہیں،قومی اسمبلی نشستوں پر 3748 آزاد، 1873 سیاسی جماعتوں کے امیدوار میدان میں ہیں ۔

صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر 8537 آزاد ، 4158 سیاسی جماعتوں کے امیدوار ہیں، قومی اور صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر 882 خواتین امیدوار ہیں۔

قومی اسمبلی کی نشستوں پر 312 اور صوبائی اسمبلی کی 570 خواتین امیدوارہیں ، ملک بھر میں 4 نشستوں پر خواجہ سرا بھی انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں۔

نادرا کا مرکزی نظام برائے تصفیہ شکایات قائم

قومی اور صوبائی اسمبلیوں پر 6 ہزار 31 سیاسی جماعتوں کے امیدوار ہیں،سیاسی جماعتوں کی نسبت تقریبا دو گنا آزاد امیدوار حصہ لے رہے ہیں۔

پنجاب اسمبلی نشستوں پر 6 ہزار 710 ، سندھ اسمبلی کی نشستوں پر 2 ہزار 878 ،خیبرپختونخوا اسمبلی کی نشستوں پر 1834، بلوچستان 1273 امیدوار میدان میں ہیں۔


متعلقہ خبریں