ڈالر کی قیمت میں 9 پیسے کی کمی، 281 روپے 13 پیسے پر بند

ڈالر

کاروباری ہفتے کے تیسرے روز ملک میں ڈالر کی قیمت میں پھر کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔

بدھ کے روز انٹربینک میں ڈالر 9 پیسے کی کمی کے بعد 281 روپے 13 پیسے پر بند ہوا ہے۔

دوسری جانب سونے کی قیمتوں میں اتار چڑھائو کا سلسلہ جاری، بین الاقوامی بلین مارکیٹ میں سونے کی قیمت میں کمی کے بعد مقامی مارکیٹ میں بھی سونا سستا ہو گیا ہے۔

عالمی مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت 3 ڈالر کی کمی سے 2047 ڈالر کی سطح پر آ گئی۔

متحدہ عرب امارات میں سونا سستا ، قیمت ایک ماہ کی کم ترین سطح پر آ گئی

مقامی صرافہ مارکیٹوں میں بھی بدھ کو 24 قیراط کے فی تولہ سونے کی قیمت 300 روپے کی کمی سے 2 لاکھ ، 16 ہزار 100 اور فی دس گرام سونے کی قیمت بھی 257 روپے کی کمی سےایک لاکھ 85 ہزار 271 روپے ہو گئی ہے۔

اسی طرح فی تولہ چاندی کی قیمت 10 روپے کی کمی سے 2650 روپے اور فی دس گرام چاندی کی قیمت بھی 8.58 روپے کی کمی سے 2271.94 روپے کی سطح پر آ گئی۔

واضح رہے کہ کچھ عرصے میں روپے کے مقابلے میں ڈالر کی قیمت میں نمایاں کمی کی پیشنگوئی کی گئی ہے۔

مارکیٹ ذرائع کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف کی جانب سے رواں ماہ 11 تاریخ کو قرض کی اگلی قسط کی منظوری کے ساتھ ہی ڈالر کی قدر میں کمی کا امکان ہے ، ڈالر کی قیمت 277 روپے یا اس سے نیچے آ سکتی ہے۔

آنے والے دنوں میں ڈالر کی قیمت میں نمایاں کمی کی پیشنگوئی
آئی ایم ایف سے قسط ملنے کے علاوہ ڈالر کی قدر میں کمی کی ایک اور وجہ بھی ہے ، پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر میں 15 دسمبر کے بعد اب تک 2 ارب ڈالر کا اضافہ ہوا ہے۔ اسٹیٹ بینک نے اس اضافے کا سبب صرف اتنا بتایا کہ حکومت کے سرکاری ان فلوز میں اضافہ ہوا ہے۔

دو ارب ڈالر آنے کے بعد اسٹیٹ بینک کے پاس زرمبادلہ ذخائر کا حجم 8.2 ارب ڈٓالر ہو گیا جبکہ مجموعی ذخائر 13.2 ارب ڈالر ہیں۔ علاوہ ازیں ملکی تجارتی خسارہ بھی تیزی سے کم ہوا ہے جس کی وجہ سے ڈالر کا اخراج کنٹرول ہوا ہے۔


متعلقہ خبریں