شرح سود میں اضافہ ملکی صنعت کیلئے پھانسی کا پھندہ ہے، مفتاح اسماعیل

Miftah Ismail

مسلم لیگ ن کے رہنما مفتاح اسماعیل نے شرح سود میں ا ضافے کوملکی صنعت کیلئے پھانسی کا پھندہ قرار دے دیا۔

اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ سود کے بڑھنے سے صرف صنعتی پیداوار میں کمی ہوگی اور حکومتی اخراجات بڑھیں گے، ڈیڑھ فیصد سود بڑھانے سے مہنگائی کم نہیں ہو گی۔

انہوں نے کہا کہ نجی شعبے کو مزید مشکلات اور سست روی کا سامنا کرنا پڑے گا، مہنگائی اور روپے کی قدرمیں کمی روکنے کیلئے 2 سال پہلے بھی یہ کام حکومت نے کیا تھا۔

مانیٹری پالیسی کا اعلان، اسٹیٹ بینک نے شرح سود بڑھا دی

مفتاح اسماعیل نے کہا کہ عمران نیازی حکومت پہلے بھی شرح سود بڑھا کر ملکی معیشت کو ریورس گیئر لگا چکی ہے۔

انہوں نے خدشہ ظاہر کیا کہ ایک بار پھر تیزی سے شرح سود بڑھائی جارہی ہے، معیشت پھر سست روی کاشکار ہو گی۔ شرح سود میں اتنا تیزی سے اضافہ کرکے مہنگائی پر قابو کیسے پایا جا سکتا ہے ؟

لیگی رہنما نے کہا کہ ان اقدام سے مہنگائی پر قابو پایا جائے گا نہ ہی روپے کی گرتی ہوئی قیمت کو روکا جا سکے گا، صنعت چلائیں تاکہ ملک سے زیادہ سے زیادہ برآمد اور کم سے کم درآمد ہو ، مہنگائی کم کرنے کے لیے حکومت بجلی کے نرخوں میں کمی کرے ۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ پیٹرول کی قیمتوں کو کم کرکے عوام اورمعیشت کو ریلیف دیاجائے۔


متعلقہ خبریں