بلوچستان کاٹیکس فری بجٹ آج پیش کیاجائے گا،تنخواہوں میں 15 فیصد تک اضافے کا امکان

Budget

بلوچستان کےآئندہ مالی سال کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا۔ سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 15 فیصد تک اضافے کا امکان ہے۔

وزیرخزانہ عبدالرحمان کھیتران بجٹ پیش کریں گے۔ وزیر خزانہ نے کہا ہے کہ صوبے کا آئندہ مالی سال کا بجٹ580 ارب روپے سے زائد کا ہو گا۔ بجٹ میں 100 ارب روپے خسارے کا امکان ہے۔

بجٹ تجاویز کے مطابق ترقیاتی منصوبوں کے لیے195ارب روپے رکھے گئے ہیں جب کہ غیرترقیاتی منصوبوں کے لیے 385ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔ بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 سے 15 فیصد اضافے کا امکان ہے۔

بجٹ اجلاس سے پہلے بلوچستان کابینہ کا اجلاس ہو گا جس میں بجٹ کی منظوری لی جائے گی۔ وزیر خزانہ کا کہنا ہے بجٹ عوام دوست ہوگا ،کوئی نیاٹیکس نہیں ہوگا۔ بلوچستان اسمبلی کے 65حلقوں کو برابری کی بنیاد پر فنڈز دیئے جائیں گے۔

وزیر خزانہ  کا کہنا ہے کہ بجٹ میں عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی ہرممکن کوشش کی جائے گی۔بلوچستان کی محدود وسائل کی وجہ سے آئندہ مالی سال کابجٹ خسارے کاہوگا۔حکومت تمام حلقوں کو یکساں بنیادوں پر فنڈز کی فراہمی یقینی بنائے گی۔


متعلقہ خبریں