قبائلی علاقے میں امیدوار کی کامیابی چیلنج

Islamabad High Court

فوٹو: فائل


اسلام آباد: قبائلی علاقے کے حلقہ پی کے 115 پر جمعیت علمائے اسلام ف کے کامیاب امیدوار کی کامیابی عدالت میں چیلنج کر دی گئی۔

حلقہ پی کے 115 سے پاکستان تحریک انصاف کے ناکام امیدوار عابد الرحمان نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں دوبارہ گنتی کی درخواست دائر کر دی۔

عابد الرحمان نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا کہ انتخابات کے روز وہ تین ہزار ووٹ سے جیت رہے تھے لیکن ریٹرننگ آفیسر نے فوری نتائج جاری کرنے کے بجائے اگلے روز تک نتائج روکے رکھے اور الیکشن کے دوسرے روز مخالف امیدوار محمد شعیب کو کامیاب قرار دے دیا گیا۔

درخواست گذار کا کہنا تھا کہ ریٹرنگ آفیسر قانون کے مطابق دوبارہ گنتی کا پابند ہے لیکن ریٹرنگ آفیسر نے میری درخواست پر دوبارہ گنتی نہیں کی۔

درخواست گزار نے عدالت سے استدعا کی کہ پی کے 115 میں دوبارہ گنتی کے حکم کے علاوہ 16 پولنگ اسٹیشنز پر دوبارہ پولنگ کا حکم دیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں قبائلی اضلاع میں انتخابات : 5 آزاد اور 5 پی ٹی آئی امیدوار کامیاب

درخواست میں الیکشن کمیشن، ریٹرنگ افسر اور تمام مخالف امیدواران کو فریق بنایا گیا ہے۔

واضح رہے کہ جمیعت علمائے اسلام ف کے محمد شعیب 18 ہزار 102 ووٹ لیکر کامیاب قرار پائے ہیں جبکہ پی ٹی آئی کے عابد الرحمان 18 ہزار 28 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔


متعلقہ خبریں