اسرائیل نے متحدہ عرب امارات سے معذرت کیوں کی؟


اسرائیل نے متحدہ عرب امارات (یو اے ای) سے کورونا پھیلانے سے متعلق سینئر اہلکار کے بیان پر معذرت کر لی۔

عرب میڈیا کی رپورٹ کے مطابق اسرائیل کے ایک سینئر اہلکار نے دبئی سے واپس آنے کے لوگوں کو ملک میں کورونا وائرس کے کیسز میں اضافے کا ذمہ دار ٹھہرایا تھا۔

اسرائیلی ٹی وی کے مطابق وزارت صحت کے چیف ڈاکٹر شیرون ایلروے نے مبینہ طور پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ دبئی کے ساتھ امن معاہدے کے دو ہفتوں کے دوران اسرائیل کے اتنے افراد ہلاک ہو گئے ہیں جتنے ان کے ساتھ 70 سالہ جنگ کے دوران نہیں ہوئے۔

اسرائیل نے غلطی کی تو دو شہروں کو ملیا میٹ کردیں گے، ایران

اس تبصرے کے بعد یو اے ای نے اسرائیل سے وضاحت طلب کر لی جس پر اسرائیل کی جانب سے باقاعدہ طور پر معافی مانگی گئی ہے۔

اسرائیل نے موقف اپنایا کہ ڈاکٹر شیرون کا بیان میں ایک مزاق تھا جسے سنجیدہ نہ لیا جائے۔

خیال رہے کہ اسرائیل میں آج کورونا کے 7 ہزار سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔


متعلقہ خبریں